حکومت کا آئندہ انتخابات میں ہرصورت الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے استعمال کا عندیہ

اسلام آباد: حکومت نے آئندہ عام انتخابات میں ہر صورت سمندر پارپاکستانیوں کو ووٹنگ کا حق دینے اور الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے استعمال کا عندیہ دیدیا۔
وزیراعظم کے مشیر برائے پارلیمانی امور بابر اعوان نے میڈیا کے مخصوص نمائندوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ یہ غلط فہمی دور کرنا چاہتا ہوں کہ بیرون ملک پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے اور ای وی ایم سے حکومت پیچھے ہٹ سکتی ہے، آئی ووٹنگ و ای وی ایم سے نہ وزیراعظم عمران خان پیچھے ہٹے گا نہ اس کی حکومت ہٹے گی۔

بابر اعوان کا کہنا تھا کہ اس کی سب سے بڑی وجہ سمندرپار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے سے متعلق سپریم کورٹ کا واضح فیصلہ ہے، حکومت سمجھتی ہے کہ سمندرپار پاکستانیوں کو ووٹنگ کا حق نہ دینا توہین عدالت ہے، الیکشن کمیشن انتخابات کرانے کیلئے آئینی ریگولیٹر ہے، الیکشن کمیشن کی زمہ داری ہے کہ وہ قانون کے مطابق الیکشن کرائے۔

وزیراعظم کے مشیر نے کہا کہ قانون بنانا نہ تو الیکشن کمیشن کا کام ہے نہ ہی اختیار، قانون بنانا پارلیمنٹ کا کام ہے اور اگر قانون بن جائے تو الیکشن کمیشن کا موقف ہی ختم ہوجاتا ہے، حکومت نے الیکشن کمیشن سمیت سب کو گھنٹوں سنا ہے، بتایا جائے کہ کیا سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹنگ کا حق دینے اور الیکٹرانک ووٹنگ مشین پر اعتراضات کرنے والوں نے دھاندلی روکنے کا کوئی طریقہ بتایا ہے، اگر جواب ناں میں ہے تو اس کا مطلب ہے دال میں کچھ کالا ہے، انہوں نے ہر حلقے میں 20 سے 25 ہزار جعلی ووٹ بنائے ہوئے ہیں۔بابر اعوان نے کہا کہ اپوزیشن کو دعوت دیتا ہوں کہ کھلے دل سے الیکٹرانک ووٹنگ مشین کو قبول کرے، ای وی ایم مشین الیکشن کمیشن خریدے گا حکومت نہیں، ہم حکومت کی تیار شدہ یا خریدی گئی الیکٹرانک ووٹنگ مشین پر اصرار نہیں کر رہے، حکومت فنڈز فراہم کرے گی، مشین الیکشن کمیشن خریدے گا۔

About BBC RECORD

Check Also

پاکستان ہرطرح کی سیاحت، کاروباراورکھیلوں کیلئے محفوظ ملک ہے، آرمی چیف

Share this on WhatsAppراولپنڈی: آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے کہا ہے کہ پاکستان عالمی ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے