سپریم کورٹ کا فیصلہ؛ یوٹیلٹی اسٹورز کے 441 ملازمین نوکریوں سے برطرف

اسلام آباد: سوئی سدرن کے بعد یوٹیلٹی اسٹور کارپوریشن سے سیکڑوں ملازمین نوکریوں سے فارغ جب کہ سیکڑوں ملازمین کو نوکریوں سے فوری برطرف کرنے کا حکم نامہ جاری کر دیا گیا۔یوٹیلٹی اسٹور کارپوریشن کے آفس آرڈر کے مطابق برطرف کرنے کے حکم نامے سے 441 ملازمین متاثر ہوں گے، چیف فنانشل آفیسر سے برطرف ملازمین کو ادا کی گئی رقم کی تفصیلات بھی طلب کر لی گئی،حکم نامے کا اطلاق برطرف ملازمین بحالی ایکٹ 2010 کے تحت بحال ملازمین پر ہو گا۔

متعلقہ زونل منیجرز، گریڈ 13 تک کے ملازمین کے خلاف ہیڈ آفس کی سطح پر کارروائی ہو گی، گریڈ 14 یا اس سے اوپر برطرف ملازمین کے خلاف ہیڈ آفس کی سطح پر کارروائی ہو گی، بحالی کے وقت حاصل کیے گئے مالیاتی فوائد ملازمین سے ریکور کیے جائیں گے، بحالی کے بعد تنخواہوں اور الاؤنسز کے تحت حاصل کی گئی رقم واپس نہیں لی جائے گی۔سپریم کورٹ نے برطرف ملازمین بحالی ایکٹ 2010 کے تحت فیصلہ جاری کیا تھا، فیصلے کے تحت بحال ملازمین سے متعلق 17 اگست کو فیصلہ جاری کیا تھا۔

About BBC RECORD

Check Also

ملتان ساٸبر کرائم کی کارکردگی ڈی جی ایف آئی اے کی شاباش

Share this on WhatsApp شبیر سدوزئی بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ ملتان ڈائریکٹر جنرل ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے