چپڑاسی کا خواجہ آصف کے اکاؤنٹ میں 28 ملین روپے جمع کرانے کا انکشاف

بندیا اسحاق

بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ لاہور

نیب دستاویزات میں بتایا گیا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے رہنما خواجہ آصف کے اکاؤنٹ میں پیسے جمع کرانے والے 4 افراد نے بیان ریکارڈ کرادیا ہے۔ آمدن سے زائد اثاثوں اور منی لانڈرنگ تحقیقات میں مسلم لیگ (ن) کے رہنما خواجہ آصف کے خلاف نیب نے اہم انکشافات سامنے آئے ہیں۔ نیب دستاویزات میں بتایا گیا ہے کہ کیس میں 4 افراد نے نیب کو بیانات ریکارڈ کرا دیے ہیں۔

نیب دستاویزات کے مطابق لاہور میں نجی بینک کے چپڑاسی انوار الرحمن نے خواجہ آصف کے اکاؤنٹ میں 28 ملین سے زائد رقم جمع کرائی، اور چپڑاسی کے مطابق اس نے اپنے سینیر افسران کے کہنے پر خواجہ آصف کے اکاؤنٹ میں رقم جمع کرائی۔دستاویزات میں بتایا گیا ہے کہ خواجہ آصف کے بھتیجے خواجہ سلطان عزیز نے خواجہ آصف کے اکاؤنٹ میں 20 ملین جمع کرائے، خواجہ سلطان کے مطابق خواجہ آصف کی ہی رقم ان کے اکاؤنٹ میں جمع کرائی گئی۔

خواجہ آصف کے 30 سالہ پرانے سیاسی ورکر رانا عبدالوحید نے خواجہ آصف کے اکاؤنٹ میں 30 ملین جمع کرائے، اور رانا عبدالوحید کے مطابق خواجہ آصف کی دی ہوئی رقم ہی خواجہ آصف کے اکاؤنٹ میں جمع کرائی گئی۔ جب کہ سرمد اعجاز نامی سیاسی ورکر نے خواجہ آصف کے اکاؤنٹ سے 5 ملین روپے نکلوا کے خواجہ آصف کے حوالے کیے، خواجہ آصف کے پاس یہ ساری رقم کہاں سے آئی خواجہ آصف نیب کو تاحال جواب نہیں دے سکے۔

About BBC RECORD

Check Also

کراچی میں رینجرز اور پولیس کی کارروائی، پولیس اہلکار کے قتل میں ملوث 2 ملزمان گرفتار

Share this on WhatsApp بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ کراچی کراچی میں رینجرز اور ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے