انڈونیشیا نے ایران کا بحری جہاز تحویل میں لیکر عملے کو گرفتار کرلیا

بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ جکارتہ

انڈونیشیا نے غیر قانونی طور پر تیل کی منتقلی کے الزام پر ایران کے بحری جہاز کو تحویل میں لے کر عملے کے 61 ارکان کو حراست میں لے لیا جب کہ تفتیش کے لیے جہاز کو جزیرے پر منتقل کردیا۔

خبر رساں ادارے کے مطابق ملائیشیا کے کوسٹ گارڈ نے اپنی بحری حدود سے گزرنے والے ایران کے بحری جہاز کو پکڑلیا ہے جس کے ذریعے مبینہ طور پر خام تیل منتقل کیا جا رہا تھا۔ بحری جہاز پر ایرانی اور پاناما کی کمپنی کے پرچم لہرا رہے تھے۔

ملائیشیا کے کوسٹ گارڈ کے ترجمان وزنو پرماندیٹا نے بتایا کہ خام تیل کی غیر قانونی منتقلی کے شبے پر عملے کو قومی جھنڈے دکھانے کو کہا گیا تاہم انہوں نے نہ صرف قومی جھنڈے نہیں دکھائے بلکہ خود کار شناختی نظام کو بھی بند کردیا اور اس کے بعد ریڈیو کال بھی موصول نہیں کی لہذا ہمارے پاس جہاز کو تحویل میں لینے کے سوا کوئی راستہ نہیں بچا تھا۔

ترجمان ملائیشیا کوسٹ گارڈ نے مزید بتایا کہ صوبہ کلیمانتان کے سمندر میں پکڑے گئے آئل ٹینکرز سے لدے بحری جہاز کو مزید تفتیش کے لئے صوبہ رائو باتم جزیرے میں لے جایا گیا ہے۔ عملے کے 61 ارکان کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔دوسری جانب ایران کے وزارت خارجہ نے نے اپنے بحری جہاز کو ضبط کرنے سے متعلق انڈونیشیا سے تفصیلات طلب کی ہیں اور اس حوالے سے دونوں ممالک کے درمیان اعلیٰ سطح پر رابطے ہوئے ہیں۔

About BBC RECORD

Check Also

الجزائر میں بدبخت شخص نے امام مسجد کو نماز کے دوران شہید کردیا

Share this on WhatsAppالجزائر سٹی: الجزائر کی مسجد طارق بن زیاد میں ایک بد بخت ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے