انڈونیشیا میں مفت کورونا ویکسینیشن کا آغاز صدر کو ٹیکہ لگا کر ہوگا

بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ جکارتہ

انڈونیشیا کے صدر جوکو ویدودو نے ملک بھر میں شہریوں کو مفت کورونا ویکسین فراہم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ ویکسین کا پہلا ٹیکہ وہ خود لگوائیں گے تاکہ عوام میں اعتماد پیدا ہو۔ خبر رساں ادارے کے مطابق انڈونیشیا نے ملک بھر میں کورونا ویکسینیشن کے آغاز کی تیاری شروع کردی ہے۔ جس کے لیے انڈونیشیا نے چین کی کمپنی سینوفارم سے رواں ماہ ایک کروڑ 2 لاکھ خوراکیں خریدی ہیں۔

انڈونیشیا آئندہ ماہ جنوری میں بھی چینی کمپنی سینو فارم سے کورونا ویکسین کی ایک کروڑ 8 لاکھ خوراکیں خریدے گا اور تب تک ملک کے فوڈ اینڈ ڈرگ ادارے سے ویکسینیشن کے آغاز کے لیے مشاورت کی جائے گی۔اس موقع پر صدر جوکو ویدودو نے قوم سے خطاب میں اعلان کیا کہ ملک بھر میں کورونا ویکسین شہریوں کو مفت فراہم کی جائیں گی اور لوگوں کا اعتماد بحال کرنے کے لیے ویکسین کو سب سے پہلے میں خود پر استعمال کروں گا۔

انڈونیشیا کورونا ویکسین کی 24 کروڑ خوراکیں خریدے گا جس کے لیے چین کی سینوفارم کے ساتھ ساتھ فائزر، آسٹرازنیکا اور ویکسین کی ترسیل کے عالمی پروگرام ’’کوویکس‘‘ سے بھی رجوع کرے گا۔واضح رہے کہ انڈونیشیا میں 6 لاکھ 29 ہزار سے زائد مریضوں میں کورونا کی تصدیق ہوچکی ہے جب کہ اس مہلک وائرس سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد 19 ہزار سے تجاوز کرگئی ہے۔

About BBC RECORD

Check Also

کورونا ويکسين: کس ملک ميں کتنے لوگوں کو ٹيکے لگ چکے ہيں؟

Share this on WhatsAppاسرائيل اسرائيل کے 50.2 فيصد شہريوں کو کورونا سے بچاؤ کے ٹيکے ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے