ہیٹی میں طاقتور زلزلے سے ہلاکتیں 304 ہوگئیں

پورٹ او پرنس: کیریبئین ملک ہیٹی میں آنے والے 7 اعشاریہ 2 شدت کے زلزلے نے بڑے پیمانے پر تباہی مچادی جس کے نتیجے میں ہلاکتوں کی تعداد 304 ہوگئی جب کہ 1800 سے زائد زخمی ہیں۔امریکی جیولوجیکل سروے کے مطابق زلزلے کا مرکزسینٹ لوئیس دوسود سے 12 کلومیٹر دور شمال مشرق میں 10 کلومیٹر گہرائی میں تھا۔ ہیٹی کے محکمئہ شہری تحفظ کے مطابق زلزلے سے بڑے پیمانے پر تباہی پھیلی ہے اور ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔ریسکیو ادارے کے ترجمان کا کہنا ہے کہ سب سے زیادہ ہلاکتیں جنوبی ہیٹی میں ہوئیں جہاں تعداد 160 ہوگئی، گرانڈ اینسے میں 100، نیپس میں 42 اور شمال مشرق میں 2 ہلاکتیں ہوئیں۔ ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 304 ہوگئی ہے۔

زلزلے کے آفٹر شاکس کا سلسلہ ابھی تک جاری ہے جن کی شدت ریکٹر اسکیل پر 5 اعشاریہ 2 ریکارڈ کی گئی ہے۔ یو ایس ایڈ کے بیورو فار ہیومینیٹرین اسسٹنس کے مطابق یو ایس ایڈ نے متاثرہ علاقے میں امدادی کاموں کا آغاز کردیا ہے۔ہیٹی کے وزیراعظم نے ملک بھر میں ایک ماہ کے لیے ایمرجنسی نافذ کرتے ہوئے اعلان کیا ہے کہ تمام دستیاب حکومتی وسائل کا استعمال کرتے ہوئے امدادی کاموں میں تیزی لائیں گے۔واضح رہے کہ ہیٹی میں 2010 کو 7.0 شدت کے زلزلے میں ایک لاکھ 60 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوگئے تھے جب کہ مالی نقصان کا تخمینہ 8 ارب ڈالر ؛گایا گیا تھا، اسی طرح 2018 میں 7.1 شدت کے زلزلے میں 12 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

About BBC RECORD

Check Also

سابق بھارتی ایجنٹ نے پاکستان میں ’ را ‘ کا نیٹ ورک بے نقاب کردیا

Share this on WhatsAppاسلام آباد: پاکستان میں بھارتی خفیہ ایجنسی را کا جاسوسی نیٹ ورک ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے