بورڈ کے زیر اہتمام انٹر میڈیٹ بارہویں کلاس کے امتحان کے شفاف انعقاد کو یقینی بنایا جا رہاہے ؛ شیخ امجدحسین

ڈیرہ غازیخان (شبیر خان سدوزئی ) ڈپٹی کنٹرولر امتحانات ثانوی و اعلی ثانوی تعلیمی بورڈ ڈیرہ غازیخان شیخ امجدحسین نے کہا ہے کہ بورڈ کے زیر اہتمام انٹر میڈیٹ بارہویں کلاس کے امتحان کے شفاف انعقاد کو یقینی بنایا جا رہاہے .انہوں نے یہ بات گورنمنٹ ڈگری کالج روجھان کے امتحانی سنٹر کے معائنہ کے موقع پر کہی جہاں صبح کے وقت بارہویں کلاس کے بیالوجی، میتھ اور لائبریری سائنس کے پیپرز ہوئے. ڈپٹی کنٹرولر امتحانات گورنمنٹ ڈگری کالج روجہان کے سنٹرمیں پیپرز کے دوران ہمہ وقت موجود رہے -قبل ازیں نیشنل بینک روجھان میں سوالیہ پرچہ جات کے سربمہر لفافہ جات کی امتحانی سنٹرز کے عملہ کو حوالگی کی بھی نگرانی کی گئی اور ٹھیک ساڑھے آٹھ بجے سوالیہ پرچہ جات کی تقسیم اور انعقاد کرایاگیا- سنٹر پر کسی بھی قسم کی کوئی بیرونی و اندرونی مداخلت نہیں تھی پورے سنٹر کی حدود میں دفعہ 144 نافذرہا نگران عملہ کے تقرر نامے اور ان کے قومی شناختی کارڈبھی چیک کئے گئے- علاوازیں تمام سپروائزری سٹاف/ نگران عملہ کے نادرا سے باضابطہ جاری کردہ کورونا ویکسی نیشن سر ٹیفکیٹ بھی چیک کئے گئے کیونکہ اس دفعہ بورڈ کے امتحانات کے لئے نگران عملہ کی ڈیوٹی سرانجام دینے کے لئے ویکسی نیشن کرانا لازمی شرط تھی- سنٹر پر امتحان دینے والے تمام امیدواران کے پاس موجود تصدیق شدہ فوٹو

گرافس کا امیدواروں کے چہروں و رولنمبر سلپس کے ساتھ موازنہ کیاگیا- روجھان سنٹر پر ایس ایچ او تھانہ روجھان منیر حسین عملہ کے ساتھ موجود رہے- امیدواروں نے پرسکون ماحول میں اپنے پیپرز دئیے- نگران عملہ و امیدواران نے کورونا ایس او پیز کی سختی سے پیروی کی- پیپرز کے اختتام پر ڈپٹی کنٹرولر امتحانات شیخ امجد حسین نے تھانہ روجھان کے خصوصی تعاون سے اپنی ذاتی نگرانی میں سپرنٹنڈنٹ سنٹر و نگران عملہ کے ذریعے حل شدہ جوابی کاپیوں کے سربمہر بنڈل نیشنل بنک روجھان برانچ کے حکام کے حوالے کرائے- ڈپٹی کنٹرولرنے واپڈا حکام کا بھی شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے ان کی ذاتی استدعا پر دوران امتحان لوڈشیڈنگ سے اجتناب کیا اور شدید گرمی میں امتحانی سنٹرز سے منسلک بجلی کے فیڈر کی سپلائی کو جاری رکھا.

About BBC RECORD

Check Also

‘شادی کے بعد عورت کی مرضی ہے خاوند کا نام لکھوائے یا والد کا’

Share this on WhatsAppلاہور؛ چیئرمین نادرا طارق ملک نے کہا ہے کہ نادرا کی پالیسی ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے