سعودی ولی عہد اور روسی صدر کا "اوپیک پلس” معاہدے کی پابندی پر زور

سعودی عرب کے ولی عہد اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان نے منگل کے روز روسی صدر ولادی میر پوتین سے ٹیلی فون پر بات چیت کی۔بات چیت کے دوران عالمی پٹرولیم مارکیٹس کی صورت حال اور عالمی اقتصادی نمو کو سپورٹ کرنے کے واسطے ان مارکیٹس کے استحکام اور توازن کو برقرار رکھنے کی کوششوں کا جائزہ لیا گیا۔

دونوں شخصیات نے اس بات کی اہمیت پر اتفاق رائے کا اظہار کیا کہ تیل پیدا کرنے والے تمام ممالک کی جانب سے تعاون اور "اوپیک پلس” معاہدے کا پابند رہنے کی ضرورت ہے۔ اس کا مقصد تیل پیدا کرنے والے ممالک اور تیل استعمال کرنے والوں دونوں کے مفادات کے تحفظ کو یقینی بنانا ہے۔

About BBC RECORD

Check Also

ترکی اور اسرائیل کے درمیان تجارتی تبادلہ تاریخی سطح پر

Share this on WhatsAppترکی اور اسرائیل کے درمیان سفارتی تعلقات سرد مہری کا شکار تاہم ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے