سی ٹی ڈی انچارج راجہ عمر خطاب کی گرفتاری کیلئے چھاپہ

سعدیہ
بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ کراچی

سندھ ہائیکورٹ نے ایئر پورٹ حملہ کیس کے ملزم ندیم پٹیل کی گمشدگی سے متعلق درخواست پر 2 ہفتے میں ملزم کو پیش کرنے کا حکم دیدیا۔جسٹس نظر اکبر اور جسٹس عبد المبین لاکھو پر مشتمل دو رکنی بینچ کے روبرو ایئر پورٹ حملہ کیس کے ملزم ندیم پٹیل کی گمشدگی سے متعلق درخواست کی سماعت ہوئی۔

کیس کے نئے تفتیشی افسر نے پیش رفت سے عدالت کا آگاہ کرتے ہوئے بیان دیا کہ ندیم پٹیل گمشدگی کے مقدمے میں نامزد سی ٹی ڈی انچارج راجہ عمر خطاب گرفتاری سے بچنے کے لیے روپوش ہوگئے ہیں۔ راجہ عمر خطاب کی گرفتاری کے لیے گزشتہ رات سی ٹی ڈی سول لائن چھاپہ مارا۔ راجہ عمر خطاب کے سیکورٹی گارڈز اور چوکیدار موجود تھے۔ مجھے کل ہی کیس کی تفتیش ملی ہے۔

جسٹس نظر اکبر نے ریمارکس دیئے ہمیں یہ بات سمجھ نہیں آتی 13 کیسز میں نامزد ملزم کو غائب کرنے کی کیا ضرورت تھی۔ کچھ بھی کرو بندہ بازیاب کراؤ، زندہ یا مردہ لاپتا بندے کو ڈھونڈ کر عدالت میں پیش کرو۔ عدالت نے ڈی ایس پی فیروز آباد کو دو ہفتوں کی مہلت دیتے ہوئے ملزم ندیم پٹیل کو پیش کرنے کا حکم دیدیا۔

About BBC RECORD

Check Also

کیا آپ بلوچی تھیریم یا بیسٹ آف بلوچستان کے بارے میں جانتے ہیں؟

Share this on WhatsAppپاکستان کے پسماندہ صوبہ بلوچستان کو کئی تاریخی حوالوں سے انتہائی اہمیت ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے