سعودی نائب وزیر دفاع اور مصری وزیر دفاع کا رابطہ ، عرب دنیا کے امن کو لاحق ہر نقصان مسترد

سعودی عرب کے نائب وزیر دفاع شہزادہ خالد بن سلمان نے مصر کی مسلح افواج کے سربراہ اور وزیر دفاع جنرل محمد ذکی سے ٹیلی فون پر بات چیت کی۔
جمعے کے روز ہونے والی بات چیت کے دوران دونوں برادر ممالک کے بیچ خصوصی تعلقات زیر بحث آئے۔ اس کے علاوہ دفاعی اور عسکری شعبوں اور خطے کی سیکورٹی برقرار رکھنے کے سلسلے میں مشترکہ تعاون مضبوط بنانے پر خاص طور پر تبادلہ خیال ہوا۔

دونوں شخصیات نے باور کرایا کہ سعودی عرب اور مصر امن و استحکام کو مضبوط بنانے اور دہشت گردی کو اس کی تمام صورتوں کے ساتھ ناکام بنانے کے شدید خواہاں ہیں۔ شہزادہ خالد اور جنرل محمد ذکی نے ایک بار پھر اس موقف کو دہرایا کہ دونوں ممالک عرب دنیا کے علاقائی امن کو پہنچنے والے کسی بھی نقصان کو یکسر مسترد کرتے ہیں۔

اس سے قبل مصری وزیر خارجہ سامح شکری نے جمعرات کے روز اپنے سعودی ہم منصب شہزادہ فیصل بن فرحان آل سعود سے ٹیلی فون پر بات چیت کی تھی۔ اس دوران دو طرفہ تعاون کے شعبوں اور مشترکہ دل چسپی کے اہم امور پر تبادلہ خیال ہوا۔ ان میں لیبیا کا بحران اور بیرونی مداخلت کو مسترد کیا جانا نمایاں موضوعات رہے۔

مصری وزارت خارجہ کے سرکاری ترجمان احمد حافظ نے اپنے بیان میں بتایا کہ ٹیلیفونک رابطے میں جانبین نے اس بات کی یقین دہانی کرائی کہ مصر اور سعودی عرب ہر قسم کے سیکورٹی چیلنج کا مقابلہ کرنے کے لیے ایک دوسرے کو سپورٹ کریں گے۔ دونوں وزراء نے اس بات پر زور دیا کہ خطے کو درپیش عظیم چیلنجز واقعتا دونوں ملکوں کے درمیان مزید رابطہ کاری کا تقاضا کرتے ہیں۔ بالخصوص متعدد عرب ممالک کے امور میں غیر ملکی مداخلت کے نتیجے میں درپیش سنگین خطرات کا مقابلہ کرنے کے لیے یہ نہایت ضروری ہے۔

About BBC RECORD

Check Also

امریکی قانون سازوں کا ٹرمپ سے سعودی عرب میں جی 20 اجلاس کے بائیکاٹ کا مطالبہ

Share this on WhatsAppرابرٹ ولیم بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ واشنگٹن امریکی قانون سازوں ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے