جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام کیلئے پیش رفت جاری ہے:وزیراعلیٰ پنجاب

شبیر خان سدوزئی
بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ ڈیرہ غازی خان
وزیراعلیٰ پنجاب سردارعثمان بزدارنے آج رحیم یار خان،روجھان اورگڑھی چاکر، میرپور ماتھیلو کا دورہ کیا- وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے رحیم یارخان میں کورونا اور ٹڈی دل پر قابو پانے کے حوالے سے حکومتی اقدامات کاجائزہ لیا- وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے رحیم یار خان کے ائیر پورٹ پر اعلیٰ سطح کے اجلاس کی صدارت کی-وزیراعلیٰ عثمان بزدار کو کورونا اور ٹڈی دل سے نمٹنے کے حوالے سے بریفنگ دی گئی اور اس ضمن میں حکومت کی جانب سے کئے جانے والے اقدامات پر غور کیا گیا-وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ ٹڈی دل پر کنٹرول کرنے کے لئے تمام ممکنہ وسائل اور اقدامات بروئے کارلائے جائیں اور کسانوں کی فصلوں کو نقصان سے بچایاجائے-وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کورونا کے حوالے سے جاری کردہ ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کاحکم د یتے ہوئے کہاکہ ایس او پیز کی خلاف ورزی برداشت نہیں کی جائے گی-

عوام کو کورونا سے بچانے کے لئے ہر ممکن انتظامی اقدام اٹھائیں گے-ایس او پیز کی خلاف ورزی پر مارکیٹوں اور بازاروں کو سیل کردیاجائے گا- وزیراعلیٰ نے کہاکہ کورونا ہو یا ٹڈی دل،اپنے عوام کے ساتھ کھڑے ہیں -میں خود شہر شہر جا کرصورتحال کا جائزہ لے رہاہوں اور موقع پر ہی فیصلے کئے جاتے ہیں -عوام سے اپیل ہے کہ وہ احتیاط کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں – حکومتی ایس او پیز پر عملدرآمد کرنے میں ہی تحفظ اور حفاظت ہے-انہوں نے کہاکہ ہدایات پر عمل نہ کرنے پر متعلقہ کاروباری اداروں اور افراد کے خلاف قانون کے تحت کارروائی ہوگی-تاجر،دکاندار، ٹرانسپورٹ،ٹریڈر ایسوسی ایشنز کورونا کا پھیلاؤ روکنے کیلئے حکومتی اقدامات کا بھرپور ساتھ دیں – بہاولپورریجن میں اب تک 8598 کورونا کے مشتبہ مریض سامنے آئے ہیں -752 مریض پازیٹو ہیں جبکہ 370صحت یاب ہوچکے ہیں -بہاولپور کے 3فیلڈ ہسپتالوں میں 505بیڈز موجود ہیں اوراب تک بہاولپور میں 3507ٹیسٹ کئے جاچکے ہیں -وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہاکہ بہاولپور ڈویژن میں ڈینگی کے خدشے کے پیش نظر حفاظتی اقدامات کئے جا رہے ہیں جبکہ بہاولپور میں ٹڈی دل سے بچاؤ کے لئے موثر اقدامات کئے گئے اورٹڈی دل سے بچاؤ کے لئے موثر سرویلنس میکنزم وضع کیاگیاہے – 95535 ہیکٹر رقبے پر سپرے کیا جا رہا ہے- 2جہاز اور 50سے زائد گاڑیاں ٹڈی دل کو کنٹرول کرنے کے لئے استعمال کی جارہی ہیں – بہاولپور، بہاولنگر اور رحیم یار خا ن میں ایک کروڑایکڑ سے زائد رقبے کی سرویلنس کی جا رہی ہے-ٹڈی دل کو کنٹرول کے لئے ماہرین کی خدمات بھی حاصل کی گئی ہیں –

گندم ذخیرہ کرنیوالے سماج دشمن عناصر کے خلاف 118ایف آئی آر درج کر کے 6666میٹرک ٹن گندم برآمد کی گئی ہے-بہاولپور میں احسا س ایمرجنسی کیش پروگرام کے تحت ساڑھے سات ارب روپے سوا 6لاکھ سے زائد خاندانوں میں تقسیم کئے جاچکے ہیں -اجلاس میں ایم این اے جاوید اقبال وڑائچ کے مرحوم والد محترم اور عامر نواز چانڈیہ کے مرحوم بیٹے کے ایصال ثواب کیلئے فاتحہ خوانی بھی کی گئی-اجلاس میں ضلع رحیم یار خان کے اراکین اسمبلی،سینئر ممبر بورڈ آف ریونیو، کمشنر بہاولپور ڈویژن، آر پی او بہاولپور،ڈپٹی کمشنر رحیم یارخان،ڈی پی او رحیم یار خان،ڈی جی پی ڈی ایم اے اور متعلقہ حکام نے شرکت کی-کمشنر بہاولپور نے رحیم یار خان میں کورونا،ڈینگی، ٹڈی دل اوراحساس ایمرجنسی پروگرام کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی – وزیراعلی عثمان خان بزداررحیم یار خان کے دورے کے بعد ضلع راجن پورکی تحصیل روجھان پہنچے اور سابق ایم پی اے مقتول سردار عاطف مزاری کے بھائی سردار شمشیر علی مزاری کی رہائش گاہ پر گئے-وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے مقتول سردار عاطف مزاری کے خاندان سے تعزیت کااظہار کرتے ہوئے سردار عاطف مزاری کے قتل کے واقعہ پر دکھ اور افسوس کااظہارکیا-وزیراعلی نے مرحوم سردار عاطف مزاری کی روح کے ایصال ثواب کے لئے فاتحہ خوانی کی اور غمزدہ خاندان کے لئے صبر جمیل کی دعاکی-وزیراعلیٰ نے کہاکہ سردار عاطف مزاری کے قتل سے دلی دکھ اور رنج پہنچا ہے-سردار عاطف مزاری ایک ملنسار اور علاقہ کے لوگوں کے لیے درددل رکھنے والے سیاستدان تھے-

ڈپٹی سپیکر پنجاب اسمبلی سردار دوست محمد مزاری، مشیر حنیف پتافی،رکن پنجاب اسمبلی سرداراحمد علی دریشک اور قبائلی عمائدین بھی اس موقع پر موجود تھے-بعدازاں وزیراعلیٰ عثمان بزدارصوبہ سندھ کے علاقے گڑھی چاکر،میر پورماتھیلو پہنچے اور سردار رحیم بخش بزدار کی رہائش گاہ پر گئے-وزیراعلیٰ نے سردار رحیم بخش بزدار سے ان کی والدہ محترمہ کے انتقال پر تعزیت کااظہار کیا-وزیراعلیٰ نے سوگوار خاندان سے دلی ہمدردی اور دکھ کااظہارکیا اور مرحومہ کی روح کے ایصال ثواب کے لئے فاتحہ خوانی کی -وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے گڑھی چاکر میں قبائلی عمائدین اورمعززین علاقہ نے ملاقات کی-وزیراعلیٰ نے قبائلی عمائدین اور معززین علاقہ کو پنجاب کے دورے کی دعوت دی- وزیراعلیٰ نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ میں صوبائی ہم آہنگی کو فروغ دینے کے لئے پہلے بلوچستان گیا،آج سندھ آیا ہوں -سندھ کے عوام کے لئے بھائی چارے، محبت، یگانگت اور اتحاد کا پیغام لیکر آیا ہوں -انہوں نے کہاکہ ہم سب ایک لڑی میں پروے ہوئے ہیں

– ہمارے دکھ سکھ سانجھے ہیں -صوبوں کے درمیان ہم آہنگی کو فروغ دینے کے لئے خیبر پختونخوا بھی جاؤں گا -انہوں نے کہاکہ پسماندہ علاقوں کی ترقی میرا اولین مشن ہے-جنوبی پنجاب کی محرومیاں دور کرنے کے لئے ہماری حکومت نے مثالی اقدام کئے ہیں -جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام کے لئے پیش رفت جاری ہے اوربہت جلد جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ فنکشنل ہوجائے گا-بہاولپور اور ملتان میں ایڈیشنل چیف سیکرٹری اور ایڈیشنل آئی جی کی تعیناتی ہوگی-جنوبی پنجاب کے لوگوں کو کام کے سلسلے میں لاہور کا سفر نہیں کرنا پڑے گا-قبائلی عمائدین نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ آپ کے دور میں جنوبی پنجاب کے عوام کو ان کا حق ملاہے-آپ نے 2سال کے عرصے میں جنوبی پنجاب میں بے شمار ترقیاتی کام کرائے ہیں -ہم چاہتے ہیں کہ یہی ترقی ہمارے علاقے میں بھی نظر آئے

About BBC RECORD

Check Also

ایف اے ٹی ایف پر پاکستان کے خلاف سعودی ووٹ پروپیگنڈہ ہے: دفتر خارجہ

Share this on WhatsAppپاکستان نے فائنینشل ایکشن ٹاسک فورس ’’ایف اے ٹی ایف‘‘ کے حوالے ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے