خلیفہ حفتر کا قومی وفاق حکومت پرلیبیا کو ترکی کے ہاتھ فروخت کرنے کا الزام

ترکی کی نیشنل آرمی کے سربراہ جنرل خلیفہ حفتر نے ترک صدر رجب طیب ایردوآن اور قومی وفاق حکومت کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ ایک بیان میں جنرل خلیفہ حفتر نے الزام عاید کیا کہ ترکی ایک استعماری ملک ہے اور طرابلس کی قومی وفاق حکومت نے لیبیا کو انقرہ کے ہاتھ فروخت کردیا ہے۔

انہوں نے عالمی سطح پر تسلیم شدہ طرابلس کی حکومت کو خائن، دشمن کی ایجنٹ اور ملک کو ترکی کے ہاتھ گروی رکھنے کی ذمہ دار قرار دیا۔لیبیا کی نیشنل آرمی کے سربراہ نے کہا کہ ان کی فوج لیبیا پرحملہ آور استعماری طاقت کو ملک سے بے دخل کرنے تک لڑائی جاری رکھے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ ترکی اپنی سابقہ شہنشاہیت بحال کرنے کے لیے لیبیا کو اپنے چنگل میں پھنسانے کی کوشش کررہا ہے مگر انقرہ کو اس کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ جنرل خلیفہ حفتر نے عیدالفطر پرقوم کو مبارک باد بھی پیش کی۔

About BBC RECORD

Check Also

ایران نواز ملیشیاؤں کی تخریبی کارروائیاں عراق کے امن کے لیے خطرہ بن رہی ہیں : واشنگٹن

Share this on WhatsAppامریکی وزارت خارجہ نے بغداد میں کردستان ڈیموکریٹک پارٹی کے دفتر پر ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے