سعودی معیشت کی نجات کا واحد راستہ یمن کے خلاف جنگ کو روکنا ہے: انصار اللہ یمن

انقلاب یمن کی اعلی کمیٹی کے سربراہ محمد علی الحوثی نے کہا ہے کہ سعودی معیشت کو تباہی سے بچانے کا واحد راستہ یہ ہے کہ ریاض یمن کے خلاف اپنی جارحیت کا سلسلہ بند کر دے۔ یمن کی اعلی انقلابی کمیٹی کے سربراہ محمد علی الحوثی نے پیر کو اپنے ایک ٹوئٹ میں کہا ہے کہ سعودی حکومت کے لئے بھاری معاشی و اقتصادی نقصانات سے بچنے کے لئے یہ بہترین موقع ہے کہ وہ یمن کے خلاف جنگ کا سلسلہ روک دے، نمائشی و کمزور راہ حل کے بجائے بنیادی راہ حل اختیار کرے ، خیالی جنگ بندی کا دعوی ترک کر دے اور وسیع البنیاد راہ حل کی پابندی کرے۔

یمن کی اعلی انقلابی کمیٹی کے سربراہ محمد علی الحوثی نے کہا کہ دنیا میں سعودی عرب کا اقتصاد مائنس میں جا رہا ہے اور امریکہ ہرگز سعودی عرب کو اس بدترین صورت حال سے نہیں بچائے گا کیونکہ واشنگٹن خود سعودی عرب کی معیشت کی تباہی کا ذمہ دار ہے۔عالمی منڈی میں تیل کی قیمتوں میں بھاری گراوٹ اور جنگ یمن سمیت مختلف جنگی اخراجات نے سعودی عرب کے اقتصاد کو شدید نقصان پہنچایا ہے۔انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ آئی ام اف کے بیان کے مطابق سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کے دور حکومت میں سعودی عرب کے زر مبادلہ کے ذخائر میں دو سو تینتیس ارب ڈالر کی کمی آئی ہے اور یوں اس ملک نے شاہ سلمان کے دور میں جس کی باگ ڈور درحقیقت بن سلمان کے ہاتھ میں ہے اپنے زر مبادلہ کی ایک بڑی مقدار سے ہاتھ دھو لیا ہے۔

About BBC RECORD

Check Also

امریکا غنڈہ گردی بند کرے ورنہ جوابی کارروائی کریں گے، چین

Share this on WhatsAppبی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ بیجنگ چین نے ٹک ٹاک اور ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے