یمن: نہم میں حوثیوں کے ڈیتھ بریگیڈ کا سربراہ ہلاک ، بقیہ عناصر نے ہتھیار ڈال دیے

بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز ؛ یمن
دارالحکومت صنعاء کے مشرق میں نہم کے محاذ پر یمنی عسکری ذرائع نے آج منگل کے روز بتایا ہے کہ حوثی ملیشیا کے ایک ذیلی گروپ "كتيبۃ الموت” (ڈیتھ بریگیڈ) نے یمنی فوج کے سامنے ہتھیار ڈال کر خود کو حوالے کر دیا ہے۔ یہ پیش رفت بریگیڈ کے سربراہ کمانڈر جابر المؤيد ، نہم کے محاذ پر بھرتی کے ذمے دار حوثی رہ نما یحیی محمد ناصر اور درجنوں حوثی جنگجوؤں کی ہلاکت کے بعد سامنے آئی۔

ذرائع نے تصدیق کی ہے کہ نہم کے محاذ پر تین گھنٹے سے زیادہ جاری رہنے والی لڑائی کے دوران ڈیتھ بریگیڈ کو محاصرے میں لے لیا گیا تھا جس پر آخر کار بریگیڈ کے بقیہ ارکان خود کو یمنی فوج کے حوالے کر دینے پر مجبور ہو گئے۔

حوثیوں کی کمر توڑ دینے والے اس کاری وار سے قبل یمنی فوج نے پیر کے روز اعلان کیا تھا کہ اس نے نہم کے محاذ پر حوثیوں کے زیرِ قبضہ پہاڑی سلسلے کو آزاد کرا لیا .. اور باغیوں کے بھاری جانی نقصان اور فرار ہونے کے بیچ یمنی فوج کی پیش قدمی جاری ہے۔یمنی فوج کے میڈیا سینٹر نے ایک وڈیو کلپ بھی جاری کیا ہے جس میں نہم کے محاذ پر حوثیوں کے خلاف لڑائی کے مناظر موجود ہیں۔

About BBC RECORD

Check Also

فیٹف کی پاکستان کو جون 2020 تک تمام اہداف مکمل کرنے کی ہدایت

Share this on WhatsAppبی بی سی ریکارڈ لندب نیوز ؛ اسلام آباد فنانشل ایکشن ٹاسک ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے