عراق دیگر ملکوں پر جارحیت کا ذریعہ نہیں بنےگا، سید عمار الحکیم

بغداد (مانیٹرنگ ڈیسک) عراق کے اصلاح اور ترقی الائنس کے سربراہ سید عمار حکیم نے تاکید کے ساتھ اعلان کیا ہے کہ ان کا ملک دیگر ملکوں پر جارحیت کے اڈے میں ہرگز تبدیل نہیں ہو گا۔سید عمار حکیم نے بغداد میں مشرقی قریب کے امور میں امریکہ کے نائب وزیر خارجہ ڈیویڈ فیلڈ سے گفتگو میں کہا ہے کہ عراق اپنے فیصلوں میں آزاد اور غیر جانبدار ہے۔

اس ملاقات میں عراق کی سیاسی صورت حال، علاقے اور بغداد و واشنگٹن کے دو طرفہ تعلقات کے بارے میں بھی گفتگو کی۔انھوں نے دنیا کے مختلف علاقوں کے ساتھ عراق کی مفاہمتی پالیسیوں اور مشترکہ مفادات کی بنیاد پر تعلقات میں توازن کی کوششوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئےہر طرح کی کشیدگی سے گریز اور علاقے کے مسائل کے حل کے لئے وسیع مذاکرات کی ضرورت پر زور دیا۔

About BBC RECORD

Check Also

روس کا نیٹو اور امریکا پر سرحد کے قریب اشتعال انگیز مشقیں کرنے کا الزام

Share this on WhatsAppروسی فوج نے سوموار کے روز امریکا اور اس کے نیٹو اتحادیوں ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے