نیوزی لینڈ کی حکومت اسلحہ رکھنے پر سخت کنٹرول کیلئے آمادہ: جاسنڈا آرڈرن

نیوزی لینڈ کی خاتون وزیراعظم جاسنڈا آرڈرن کا کہنا ہے کہ حکومت ملک میں اسلحہ رکھنے سے متعلق قوانین کو زیادہ سخت کرنے پر آمادہ ہو گئی ہے۔
پیر کے روز ایک پریس کانفرنس کے دوران انہوں نے بتایا کہ اس سلسلے میں اصلاحات کا اعلان آئندہ 10 روز میں کر دیا جائے گا۔

جاسنڈا کے مطابق وہ آئندہ پیر کے روز کابینہ کے اگلے اجلاس سے قبل متعلقہ فیصلوں کے بارے میں مزید تفصیلات میڈیا اور عوام کے سامنے پیش کرنے کا ارادہ رکھتی ہیں۔خاتون وزیراعظم نے امید ظاہر کی ہے کہ اسلحہ رکھنے کے قانون سے متعلق اصلاحات سے نیوزی لینڈ کا معاشرہ زیادہ محفوظ ہو جائے گا۔

انہوں نے بتایا کہ اس حوالے سے تحقیقات کی جائیں گی کہ حملے سے گریز کے لیے کیا اقدامات کیے جا سکتے تھے۔ جمعے کے روز کرائسٹ چرچ شہر میں دو مساجد پر دہشت گرد حملوں کے بعد پورے نیوزی لینڈ میں سکیورٹی انتہائی ہائی الرٹ ہے۔ حملوں میں 50 افراد شہید اور درجنوں زخمی ہو گئے تھے

About BBC RECORD

Check Also

ٹرمپ نے کانگرس کو 3000 امریکی فوجیوں کی سعودی عرب میں تعیناتی بارے آگاہ کردیا

Share this on WhatsAppامریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کانگرس کو باضابطہ طور پر 3000 امریکی ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے