طیب اردگان ہی وہ شخص ہیں جو داعش کا خاتمہ کرسکتے ہیں، ٹرمپ

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ ترک صدر طیب اردگان ہی وہ شخص ہیں جو داعش کا خاتمہ کرسکتے ہیں۔
امریکی صدر کی ترک ہم منصب کو فون کال کی تفصیلات سامنے آئی ہیں جس میں ٹرمپ نے اردگان کو کہا کہ ہم اپنا کام کرچکے ہیں اب شام آپ کے حوالے۔ سینیئر امریکی عہدیدار کے مطابق 14 دسمبر کو امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ترک صدر رجب طیب اردگان کے درمیان گفتگو میں ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ ہم اپنا کام کرچکے ہیں اب شام آپ کے حوالے اور آپ ہی وہ شخص ہیں جو داعش کا خاتمہ کرسکتے ہیں۔

وائٹ ہاؤس کے ایک اور سینیئر حکام نے کہا کہ ترک صدر رجب طیب اردگان نے امریکی صدر کو یقین دلاتے ہوئے کہا کہ ہم شام میں داعش کا خاتمہ کردیں گے، ہم نے پہلے بھی یہ کام کیا ہے اور جب تک امریکا کی لاجسٹسک سپورٹ ساتھ ہے ہم داعش کا خاتمہ کرسکتے ہیں۔دوسری جانب امریکی صدر ٹرمپ نے اپنی ٹوئٹ میں کہا ہے کہ ترکی شام میں داعش کی باقیات کا خاتمہ کردے گا، طیب اردگان ہی وہ شخص ہے جو یہ کام کرسکتا ہے جب کہ امریکی فوج واپس گھر آرہی ہیں۔

واضح رہے کہ چند روز قبل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ویڈیو پیغام میں شام سے امریکی فوجیوں کو واپس بلانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہم نے شام میں داعش کو شکست دیدی ہے۔

About BBC RECORD

Check Also

دنیا ایک نئے خطرناک مرحلے میں داخل ہو گئی،‘ عالمی ادارہ صحت

Share this on WhatsAppعالمی ادارہ صحت ڈبلیو ایچ او کے مطابق کورونا وائرس کی وجہ ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے