نانا پاٹیکر کے خلاف آوازاٹھانے پر ہندو انتہا پسند جماعت نے دھمکیاں دیں، تنوشری دتہ

ممبئی: بالی ووڈ اداکارہ تنوشری دتہ کا کہنا ہے کہ ناناپاٹیکر پر جنسی ہراسانی کے الزامات لگانے کے بعد ہندو انتہا پسند جماعت ایم این ایس کی جانب سے انہیں دھمکیاں دی گئیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق حال ہی میں دئیے گئے انٹرویو میں اداکارہ تنوشری دتہ نےانکشاف کرتے ہوئے کہاکہ ناناپاٹیکر پر جنسی ہراسانی کے الزامات لگانے کے بعد بھارتی سیاسی جماعت مہاراشٹرا نونرمان سینا(ایم این ایس)کی جانب سے انہیں دھمکیاں دی گئیں اور کہا گیا کہ وہ مجھ پر حملہ کروائیں گے اور مجھے انڈسٹری اور شہر سے باہر نکلوادیں گے۔

تنوشری دتہ نے الزام لگایا کہ سیاسی جماعت کی جانب سے دی گئی دھمکیوں کے پیچھے نانا پاٹیکر ہی تھے۔ اداکارہ نے کہا کہ انہیں ایم این ایس کی جانب سے ابھی بھی دھمکیاں دی جارہی ہیں۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے ممبئی پولیس کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے انہیں تحفظ فراہم کرنے کی پیشکش کی۔

About BBC RECORD

Check Also

دپیکا کی ون ڈیزل کیساتھ فلم ’ ٹرپل ایکس‘ کے نئے سیکوئل میں انٹری

Share this on WhatsAppممبئی: بالی ووڈ کی نامور اداکارہ دپیکا پڈوکون ہالی ووڈ کی مشہور ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے