سرکاری زمینیں بیچ کر50 لاکھ گھروں کیلئے وسائل اکٹھے ہوسکتے ہیں، وزیراعظم پاکستان

اسلام آباد: پاکستان کے وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ سرکاری زمینوں کو بیچ کر 50 لاکھ گھر منصوبے کے لئے وسائل اکٹھے ہوسکتے ہیں۔ وزیرِاعظم عمران خان کی زیر صدارت اعلی سطح کا اجلاس ہوا جس میں پی ٹی آئی حکومت کی جانب سے 50 لاکھ گھروں کی تعمیر کے 5 سالہ منصوبے کو عملی جامہ پہنانے کا معاملہ زیرِ غور آیا، سیکریٹری ہاؤسنگ کی جانب سے وزیرِ اعظم کوہاؤسنگ منصوبے کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لئے مطلوبہ زمین، تعمیرات کے لئے مطلوبہ وسائل کی فراہمی کے حوالے سے مختلف آپشنز پربریفنگ دی گئی۔

سیکریٹری ہاؤسنگ نے وزیر اعظم کو ملک میں گھروں کی موجودہ صورتحال اور سالانہ طلب سے آگاہ کیا اور پروگرام کو عملی جامہ پہنانے کے لئے پرائیویٹ سیکٹر، غیر ملکی سرمایہ کاروں کو مطلوبہ سہولیات کی فراہمی کے لئے انتظامی سطح پر اور متعلقہ قوانین میں ترامیم سے متعلق بریفنگ دی۔

اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ 50 لاکھ گھروں کی تعمیر پی ٹی آئی حکومت کے ایجنڈے کا اہم جزو ہے، حکومت بے گھر افراد کو گھروں کی فراہمی کے وعدے کی تکمیل کے لئے پرعزم ہے۔ انہوں نے کہا کہ گھروں کی تعمیر سے ملک میں بے گھر افراد کی رہائش کا مسئلہ حل ہوگا، اور لاکھوں بے روزگار افراد کو نوکریاں میسر آئیں گی جب کہ ہاؤسنگ سیکٹر سے منسلک صنعتوں کو بھی ترقی ملے گی۔

وزیراعظم نے کہا کہ سرکاری زمینوں کو بیچ کر 50 لاکھ گھر منصوبے کے لئے وسائل اکٹھے ہوسکتے ہیں، سرکاری اراضیوں کے علاوہ پنجاب اور خیبر پختونخوا کے گیسٹ ہاؤسز اور دیگر سرکاری عمارتوں کی زمینوں کو ہاؤسنگ پروگرام کے لیے خاطر خواہ مالی وسائل اکٹھے کیے جا سکتے ہیں۔وزیراعظم نے پروگرام کے جلد از جلد اعلان کے لئے کمیٹی کو حتمی سفارشات آئندہ دو ہفتوں میں پیش کرنے کی ہدایت بھی کی۔

About BBC RECORD

Check Also

افواج پاکستان نے امن و ترقی کیلیے ملک بھر میں کام کیا ہے، کمانڈر سدرن کمانڈ

Share this on WhatsAppچمن: پاک فوج کے کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے