اسلام آباد کے ایف نائن پارک میں لڑکی سے زیادتی، 4 سی ڈی اے ملازمین گرفتار

اسلام آباد: وفاقی دارالحکومت کے ایف نائن پارک میں 4 سی ڈی اے ملازمین نے لڑکی کو زیادتی کا نشانا بنایا تاہم ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔
بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز کے مطابق اسلام آباد کے ایف نائن پارک میں سی ڈی اے کے 4 ملازمین نے لڑکی کو زیادتی کا نشانا بنا ڈالا، پولیس کا کہنا ہے کہ واقعہ 2 اگست کو پیش آیا تھا تاہم متاثرہ لڑکی کی درخواست پرمقدمہ درج کرکے چاروں ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

تھانہ مارگلہ پولیس کے مطابق متاثرہ لڑکی نے اپنے بیان میں بتایا کہ چاروں سی ڈی اے ملازموں نے دھمکیاں دے کر اس کو زیادتی کا نشانہ بنایا۔
ایف نائن پارک میں زیادتی کے واقعے پر سپریم کورٹ میں ایک کیس کی سماعت کے دوران جسٹس عمر عطابندیال نے ریمارکس میں کہا کہ ایف نائن پارک اسلام آباد کا سب سے بڑا پارک ہے، وہاں لائٹس کیوں نہیں لگائی گئیں، سب سے بڑے پارک میں لڑکی کےساتھ زیادتی ہوگئی اور آپ کہتے ہیں بلب خراب ہیں، شام تک تمام لائٹس ٹھیک کروا کر رجسٹرار کو رپورٹ پیش کی جائے۔

About BBC RECORD

Check Also

موجودہ حکومت صفائی،شجرکاری اور تجاوزات کے خلاف بلا امتیاز آپریشن کررہی ہے: رانا گلزار احمد

Share this on WhatsApp۔حکومت پنجاب کی ہدایت پر ڈیرہ غازیخان میں کلین اینڈ گرین پنجاب ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے