کوئٹہ میں دھماکے سے 3 پولیس اہلکار شہید، 18 زخمی

کوئٹہ میں بلوچستان اسمبلی کے قریب جی پی او چوک پر دھماکے کے نتیجے میں 3 پولیس اہلکار شہید اور 18 افراد زخمی ہوئے ہیں۔
نمائندہ کے مطابق بلوچستان اسمبلی کا اجلاس ختم ہوتے ہی اسمبلی سے تھوڑے فاصلے پر ریڈ زون کے قریب جی پی او چوک پر زور دار دھماکا ہوا جس کے نتیجے میں قریبی عمارتوں کے شیشے بھی ٹوٹ گئے جب کہ قریب کھڑی ایک بس بھی بری طرح متاثر ہوئی۔

بی بی سی ریکارڈ نیوز کے مطابق دھماکا پولیس ٹرک کے قریب ہوا جس کے نتیجے میں 3 پولیس اہلکار شہید ہوگئے جب کہ 18 افراد زخمی ہوئے ہیں جن میں پولیس اہلکار اور عام شہری بھی شامل ہیں جنہیں فوری طور پر سول اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

سیکیورٹی اہلکاروں نے بلوچستان اسمبلی کی عمارت کو چاروں طرف سے گھیرے میں لے لیا ہے اور اس حوالے سے مزید تفتیش کی جارہی ہے جب کہ دھماکے کی نوعیت کے بارے میں تاحال کچھ کہنا قبل از وقت ہوگا۔ وزیراعلیٰ بلوچستان ثنااللہ زہری کے خلاف تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے آج اسمبلی میں اہم اجلاس ہونا تھا جس کے پیش نظر ریڈزون میں پولیس اور ایف سی کی بھاری نفری تعینات کی گئی تھی البتہ وزیراعلیٰ کے استعفیٰ دینے کی وجہ سے اجلاس ملتوی کردیا گیا۔

About BBC RECORD

Check Also

ایرانی ہیکرز کا حملہ، اسرائیلی ویب سائٹس پر اسرائیل کی تباہی کی ویڈیو چلنے لگی

Share this on WhatsAppبی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛لاہور اسرائیلی ویب سائٹس ہیکرز کے نشانے ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے