راکھی ساونت سزا یافتہ سکھ گرو گرمیت سنگھ کی بیٹی بن گئیں

ممبئی: بھارت کے بدنام زمانہ گروگرمیت سنگھ کی زندگی پر بننے والی فلم میں راکھی ساونت ان کی بیٹی ہنی پریت کا کردار نبھائیں گی۔

بالی ووڈ میں مشہور شخصیات کی زندگیوں پر فلم بنانے کا رجحان اتنا زور پکڑ گیا ہے کہ بھارتی فلمساز مشہور انسان کی سوانح حیات پر فوراًفلم بنانے کا اعلان کردیتے ہیں بنا یہ سوچے سمجھے کہ اس انسان کی شہرت منفی ہے یا مثبت، حال ہی میں بھارت کے بدنام زمانہ گروگرمیت سنگھ کی زندگی پرہدایت کارآشوتوش مشرا نے فلم بنانے کا فیصلہ کیا گیا ہے جس میں اداکارہ راکھی ساونت ان کی منہ بولی بیٹی ہنی پریت کا مرکزی کردار نبھائیں گی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق فلم میں بھارت کے ناموراداکاررضامراد کوگرمیت سنگھ اور ان کی منہ بولی بیٹی ہنی پریت کے کردار کے لیے راکھی ساونت کو کاسٹ کیا گیا ہے، فلم کی شوٹنگ بھی شروع کردی گئی ہے، تاہم دلچسپ بات یہ ہے کہ رضامراد شوٹنگ پر آئے ہی نہیں جس کی وجہ سے اداکار سنجے نیگی نے باباگرمیت کا کردارادا کیا، فلم کی ہدایت کاری کے فرائض آشوتوش مشرا اداکررہے ہیں جب کہ بگ باس سےشہرت حاصل کرنے والے اداکاراعجازخان فلم میں پولیس آفیسرکا کردار نبھائیں گے۔

فلم میں گرمیت سنگھ کی زندگی کی کہانی کو بیان کیا جائے گا جس میں ان کے راک اسٹار سے قیدی بننے تک کے حالات پیش کیے جائیں گےجب کہ فلم میں گرمیت اور ہنی پریت کے رشتے سے متعلق بھی کئی سچائیاں پیش کی جائیں گی، فلم کی شوٹنگ کا آغاز دہلی میں کردیا گیا ہے، فلم رواں سال دسمبر میں کرسمس کے موقعے پرریلیز کی جائے گی۔

واضح رہے کہ اداکارہ راکھی ساونت کا ہنی پریت اورگرمیت سنگھ کے حوالے سے کہنا ہے کہ وہ ان دونوں کو کافی عرصے سے جانتی تھیں، انہوں نے گرمیت سنگھ کی زندگی کے بارےمیں بات کرتے ہوئے کہا کہ گرمیت اپنی منہ بولی بیٹی ہنی پریت کے بنا نہیں رہ سکتے تھے اورہرموقعے پراپنی بیٹی کوساتھ رکھتے تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں