سعودی بحریہ نے ’’اسلحہ بردار‘‘ کشتی پکڑ لی

سعودی بحریہ نے اپنی سمندری حدود میں 3 کشتیوں کا راستہ روک لیا۔ ان میں سے ایک کے پکڑے جانے پر انکشاف ہوا کہ وہ اسلحے سے بھری ہوئی تھی اور اسے تخریب کاری کے مقصد سے استعمال کیا جانا تھا۔

ایک سعودی ذمے دار ذریعے کے مطابق جمعہ 16 جون کی رات آٹھ بج کر اٹھائیس منٹ پر سعودی عرب کے علاقائی پانی میں تین کشتیاں داخل ہوئیں جن پر دو رنگوں سفید اور سرخ پر مشتمل پرچم لگے ہوئے تھے۔ ان کشتیوں نے تیزی کے ساتھ سعودی پٹرولیئم فیلڈ “المرجان” کے پلیٹ فارمز کا رخ کیا۔

ذریعے نے بتایا کہ سعودی بحریہ کی فورسز نے فوری طور پر ان کشتیوں کو خبردار کرنے کے لیے فائرنگ کی۔ اس دوران ایک کشتی کو پکڑ لیا گیا جب کہ دیگر دو کشتیاں فرار ہو گئیں۔ پکڑی جانے والی کشتی کی تلاشی پر انکشاف ہوا کہ وہ تخریب کاری کے مقصد سے مکمل طور پر اسلحے سے بھری ہوئی تھی۔

سعودی ذریعے نے باور کرایا کہ مملکت دہشت گردی کے خلاف جنگ ، تخریبی کارروائیوں پر روک لگانے اور قومی سلامتی کے تحفظ کے سلسلے میں مکمل عزم رکھتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں