کلبھوشن یادیو کی پھانسی رکوانے کے لیے بھارت کی پاکستان کو دھمکی

ئی دلی: بھارتی وزیرِ خارجہ سشما سوراج نے پاکستان کو دھمکی دی ہے کہ اگر ہندوستانی جاسوس کلبھوشن یادیو کو پھانسی دی گئی تو پاکستان کو اس کے نتائج بھگتنا ہوں گے۔ گزشتہ روز بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کو بلوچستان اور کراچی میں منظم دہشت گردی کی منصوبہ بندیوں کا اعتراف کرنے کے بعد فوجی عدالت نے پھانسی کی سزا سنائی تھی جس پر شدید ردِ عمل کا مظاہرہ کرتے ہوئے نئی دہلی میں تعینات پاکستانی سفیر عبدالباسط کو بھارتی وزارتِ خارجہ میں بلوا کر احتجاجی مراسلہ ان کے سپرد کیا گیا جبکہ بھارت میں قید بے گناہ پاکستانی شہریوں کی رہائی بھی مؤخر کردی گئی۔
دہلی میں بی بی سی ریکارڈ لندن ڈاٹ کام : کے بیورو چیف کے مطابق منگل کو لوک سبھا میں خطاب کرتے ہوئے سشما سوراج کا کہنا تھا کہ کلبھوشن ’’بھارت ماتا کا بیٹا‘‘ ہے جس کے خلاف الزامات بے بنیاد ہیں،اس کے دفاع میں اچھا وکیل کھڑا کرنا بہت چھوٹی بات ہے اور اگر ضرورت پڑی تو وہ صدر تک سے بات کریں گی۔
بی بی سی ریکارڈ لندن کے مطابق بھارتی وزیرِ خارجہ سشما سوراج کا کہنا تھاکہ کلبھوشن کو ایران سے اغوا کیا گیا تھا، ‘وہ بےقصور ہے اور یہ سارا ڈرامہ انڈیا کو بدنام کرنے کے لیے کیا گیا ہے۔’
سشما سوراج نے پاکستان کو دھمکی دی کہ اگر کلبھوشن کو پھانسی ہوئی تو دونوں ممالک کے درمیان دو طرفہ تعلقات شدید متاثر ہوں گے اور ایسے کسی بھی پاکستانی اقدام کا جواب دینے کےلیے بھارتی حکومت ’’کسی بھی حد تک‘‘ جائے گی۔

پاکستانی حکام کے مطابق انڈین خفیہ ادارے ‘را’ کے ایجنٹ اور انڈین بحریہ کے افسر کمانڈر کلبھوشن یادو کو تین مارچ 2016 انسداد دہشت گردی کی ایک کارروائی کے دوران بلوچستان کے علاقے ماشخیل سے پاکستان کے خلاف جاسوسی کی کارروائیوں میں ملوث ہونے پرگرفتار کیا گیا تھا۔

بیو رو چیف کے مطابق لوک سبھا کے اجلاس میں بھارتی رہنماؤں نے پاکستان کے خلاف تقاریر کیں اور مطالبہ کیا کہ کلبھوشن یادیو کو دی جانے والی سزا پر مذمتی قرارداد منظور کی جائے جب کہ اس دوران نئی دہلی میں پاکستانی سفارت خانے کے باہر مظاہرہ بھی کیا گیا۔

About BBC RECORD

Check Also

قوم کی حمایت سے مادر وطن کا تمام خطرات سے دفاع کریں گے،ترجمان

Share this on WhatsAppمحمد شفیق قریشی بی بی سی ریکارڈ لندن نیوز؛ راولپنڈی ڈی جی ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے